ہے مجھے عشق حضورؐ آپ سے پیار آپؐ سے ہے

ہے مجھے عشق حضورؐ آپ سے پیار آپؐ سے ہے

مری نعتوں میں سلاموں میں نکھار آپ سے ہے

ایک ہو جائیں مسلمان سبھی دُنیا کے

مری فریاد ظفرؔ میری پُکار آپؐ سے ہے

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
Share on facebook
Share on twitter
Share on whatsapp
Share on telegram
Share on email
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ

اردوئے معلیٰ

پر

خوش آمدید!

گوشے

متعلقہ اشاعتیں

دل سے تم عزت محمد کی کرو
حضور آپ کا گھر حاصل زمان ومکاں
کب تک یہ مصیبتیں اُٹھائے اسلام
دل میں سرکارؐ کی محبت ہے
ذکرِ خیر الانامؐ سُوجھے گا
شاہِ کونین کی ثناء کرنا
خدا تک ہیں جو رہبر رہنما ہیں
قسم مجھ کو حبیب کِبریا کی
زندگانی کا یہ قرینہ ہو
’’قبر میں لہرائیں گے تا حشر چشمے نوٗر کے‘‘