یا رب عظیم ہے تو

یا رب عظیم ہے تو

سب پر رحیم ہے تو

 

تعریف تجھ کو زیبا

توصیف میرا شیوہ

 

آنکھوں سے تو چھپا ہے

دل میں مگر بسا ہے

 

پھولوں میں تیری خوشبو

گُلشن میں بس تو ہی تو

 

سورج میں نور تیرا

ہر جا ظہور تیرا

 

تو ہی بزرگ و برتر

قادر ہر ایک شے پر

 

خالق ہے آسماں کا

مالک ہے دو جہاں کا

 

واحد ہے اور احد ہے

ناصر ہے اور صمد ہے

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
Share on facebook
Share on twitter
Share on whatsapp
Share on telegram
Share on email
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ

اردوئے معلیٰ

پر

خوش آمدید!

گوشے

متعلقہ اشاعتیں

اسم اللہ، میری جاگیر
اذانوں میں صلوٰتوں میں، خدا پیشِ نظر ہر دم
خدا کی ذات پر ہر انس و جاں بھی ناز کرتا ہے
خدا موجود ہر سرِ نہاں میں
خداوندِ شفیق و مہرباں تو
خدا کا نام میرے جسم و جاں میں
خدائے پاک کا فیض و عطا جاری و ساری ہے
خدا موجود ہر جا ہر زمن میں
خدا کا پیار ستر ماؤں جیسا
خدا کی نعمتیں جھُٹلائیں کیسے