اردوئے معلیٰ

Search

اب جائے کہاں اُمّتِ دلگیر نبی جی

کام آتی نہیں کوئی بھی تدبیر نبی جی

 

مشکل پہ ہے مشکل تو مصیبت پہ مصیبت

اس عُسر میں ہو صورتِ تیسیر نبی جی

 

حالات ہوئے جاتے ہیں ابتر سے بھی اخرب

للّٰہ کوئی صورتِ تعمیر نبی جی

 

مجبور ہے محصور ہے وہ کرب و بلا میں

ہے خون میں ڈوبا ہوا کشمیر نبی جی

 

کشمیر کی تکلیف پہ جلتا ہے مرا دل

القدس بھی ہے درد کی تصویر نبی جی

 

الجھے وہ مصائب میں ترے شام و یمن ہیں

برما کے مسلماں بھی ہیں نخچیر نبی جی

 

عرصہ ہوا تنذیر کے صحرا میں بھٹکتے

دے ڈالیے اب کوئی سی تبشیر نبی جی

 

جز آپ کے ہے کون یہاں حامی و یاور

جز آپ کے ہوتی نہیں تدبیر نبی جی

 

اقبال بھی حالی بھی سناتے رہے دکھڑے

کم ہونے میں آتی نہیں تعزیر نبی جی

 

نوری بھی ہے مجرم کی طرح حاضرِ دربار

مل جائے معافی، جو ہے تقصیر نبی جی

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ