اردوئے معلیٰ

Search

اور مہک تھی جو اس باغ کی گھاس میں تھی

اس کے پاؤں کی خوشبو بھی اُس باس میں تھی

 

تجھ بارش نے تن پھولوں سے بھر ڈالا

خالی شاخ تھی اور اِس رُت کی آس میں تھی

 

تونے آس دلائی مجھ کو جینے کی

میں تو سانسیں لیتی مٹی یاس میں تھی

 

یاد تو کر وہ لمحے وہ راتیں وہ دن

میں بھی تیرے ساتھ اُسی بن باس میں تھی

 

ہر پل تیرے ساتھ تھی میں کب دور رہی

میں خوشبو تھی اور تیرے احساس میں تھی

 

بارش تھی شب بھر اور بھیگ رہی تھی میں

جاناں کیسی شدت میری پیاس میں تھی

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ