اردوئے معلیٰ

Search

بات سننے کا ہے کچھ تو فائدہ دیوار کو

کھود کے دیکھوں گی میں باقاعدہ دیوار کو

 

نفرتیں پل میں کسی کی اک جھلک پہ مٹ گئیں

کھا گیا طوفان اک نوزائیدہ دیوار کو

 

عقل کی باتیں نہ لکھ بے عقل کے ماتھے پہ تو

مت سکھا قانون اور یہ قاعدہ دیوار کو

 

اسنے واپس لوٹ کر آنا ہے اور نہ آئے گا

دے رہی آواز میں بے فائدہ دیوار کو

 

دیکھ لینا توڑ دونگی ایک دن میں دوستا

در سے چپکی بے سبب بے قاعدہ دیوار کو

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ