اردوئے معلیٰ

Search

بادشاہی کی ہے نہ زر کی تلاش

ہے مجھے بس تری نظر کی تلاش

 

نافیِٔ لا کے بابِ رحمت سے

خالی پلٹی اگر مگر کی تلاش

 

طوفِ روضہ کی آرزو تن کو

سر کو ہے تیرے سنگ در کی تلاش ”

 

عفو خود ڈھونڈتا ہو جرم جہاں

کیا وہاں کیجے درگزر کی تلاش

 

عاصیوں کو وہاں وہ ڈھونڈیں گے

بھولے مادر جہاں پسر کی تلاش

 

جب ہو محبوب کو خبر ساری

تو ہے بے سود نامہ بر کی تلاش

 

خوشبوئے رہ سے تارے کرتے تھے

اپنے مہکے ہوئے قمر کی تلاش

 

ہے معظمؔ کو بہرِ مدحِ فصیح

فکرِ نو ، حرفِ معتبر کی تلاش

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ