اردوئے معلیٰ

بلَکتے دل کو راحت، چشمِ نم کو سُکھ عطا ھو

الٰہی ! پنجتن کے صدقے ھم کو سُکھ عطا ھو

 

مَیں غزلیں کہنے والا روز نَوحے لکھ رھا ھُوں

مرے آنسُو تھمیں، میرے قلم کو سُکھ عطا ھو

 

چلے جائیں یہاں سے وحشت و دھشت بھرے دن

پلٹ آئے محبت والا موسم، سُکھ عطا ھو

 

خُدایا ! ساکنانِ دشتِ دل کی خیر رکھنا

نبی کا واسطہ ! سب اھلِ غم کو سُکھ عطا ھو

 

شہیدوں کو عطا ھو جنت الفردوس، یارب

یتیموں اور مسکینوں کو دم دم سُکھ عطا ھو

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے

اشتہارات

لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ

اردوئے معلیٰ

پر

خوش آمدید!

گوشے۔۔۔

حالیہ اشاعتیں

اشتہارات

اشتہارات