تو برتر تو ہی اعلیٰ، انت مولانا

تو برتر تو ہی اعلیٰ، انت مولانا

ترا ہم کو سہا را ، انت مولانا

 

جہانِ رنگ و بو تیری کہانی ہے

مصنف تو ہی اس کا ، انت مولانا

 

زمین و آسماں میں حکمتیں تیری

کوئی ڈھونڈے تو ہوں وا، انت مولانا

 

ترے بندے تجھے چاہیں ہمیشہ ہی

کوئی تجھ سا حسیں کیا ، انت مولانا

 

وسیلہ حشر میں تیرا نبیؐ ہوگا

سو ہم کو بخش دینا انت مولانا

 

حَسیں تو ہے حَسیں تیرا نبیؐ بے حد

حسیں ہے عرش تیرا انت مولانا

 

عطا حاضر ہے تیرے سامنے مالک

اسے اپنا بنانا انت مولانا

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
Share on facebook
Share on twitter
Share on whatsapp
Share on telegram
Share on email
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ

اردوئے معلیٰ

پر

خوش آمدید!

گوشے

متعلقہ اشاعتیں

زمین و آسماں گُونجے بیک آواز، بسم اللہ
اَلحَمَّد توں لے کے وَالنَّاس تائیں​
خدا کا ذکر، ذکرِ دلکشا ہے
اُن پہ اللہ کرم کرتے ہیں
ترا لطف و کرم بے انتہا ہے
خدا کی حمد ہر لحظہ طریقِ عاشقاں ہو گا
خداوندِ زمین و آسماں تُو
رکُوع و سجود و قیام اللہ اللہ
دایا سب جہانوں پر ترا فضل و کرم ہے
خدا مُونس شفیق و مہرباں ہے