اردوئے معلیٰ

Search

تُو عبدِ معظم ہے تری ذات ہے مَحمُود ، اے احمدِ معبود ﷻ

تُو مُظہَرِ توحید ہے تُو مَظہَرِ معبود ، اے احمدِ معبود ﷻ

 

تیرا یہ تَشاہُد ، ترے مَشہُود کا ہے صاد ، اے سیدِ اَشہاد

تو صادقِ اَصدَق ہے تُوہی شَاہدِ مَشہُود ، اے احمد ِ معبود ﷻ

 

توحیدِ مُجَرَّد سے مُزَیَّن تِرے اَسباق ، اے حُجَّتِ خَلَّاق ﷻ

تُو نَاسخِ تَثلِیث ہے تُو مُبطِلِ تَلمُود ، اے احمدِ مَعبُود ﷻ

 

تُو حَاملِ تَفضِیل ہے تُو نُزہتِ کونین ، اے رَحمتِ دارین

اَزہَر ہے خدائی میں تری رفعتِ مَمدُود ، اے احمدِ معبود ﷻ

 

قُرباں تِری گُفتار پہ ہے مَجلِسِ آفاق ، اے مَصدرِ اَخلاق

اُسوہ ہے دو عالم میں ترا نسخہء بہبُود ، اے احمدِ معبود ﷻ

 

در ارض و سماوات تری شان ہے اَشہَر ، اے ساجدِ اکبر

سجدے ترے کونین میں ہیں اَشہَدِ مَسجُود ، اے احمدِ معبود

 

شُقرانؓ و جُلَیبِیبؓ ہو یا بُو زرؓ و سلمانؓ ، ہیں صاحب و سلطان

ہے باعثِ توقیر تری نسبتِ مسعود ، اے احمدِ معبود ﷻ

 

سدرہ سے ہوۓ جب شہِ کونین روانہ ، کہتا تھا زمانہ

اِدراک سے باہر ہے تری منزلِ مقصود ، اے احمدِ  معبود

 

اقلیمِ صَباحَت ہے تِرے حُسن سے آباد ، اے حُسنِ خداداد

صورت ہے شہِ حُسن تری نازشِ مُودُود ، اے احمدِ معبود ﷻ

 

ہے چشمِ ندیمؔ آج مدینے کی مُطَوِّف ، منظر ہے مُلَطِّف

آقا ترے مُنقاد کا مَقسُوم ہے خوشنُود ، اے احمدِ معبود ﷻ

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ