اردو معلی copy
(ہمارا نصب العین ، ادب اثاثہ کا تحفظ)

ثقیل اتنی کہاں گفتگو محبت کی

ثقیل اتنی کہاں گفتگو محبت کی

نگاہِ ناز سے کُھلتا ہے معاملہ دل کا

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
Share on facebook
Share on twitter
Share on whatsapp
Share on telegram
Share on email
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ

اردوئے معلیٰ

پر

خوش آمدید!

گوشے

متعلقہ اشاعتیں

مجھ کو سارا حساب آتا ہے
جا محبّت کی نئی قِسم مِرے سامنے لا
یوں تو شہر میں دس مے خانے ہیں لیکن
نیکیاں ! اپنی اپنی لے آؤ
تلاشِ ذات کی منزل تو اک ٹھکانہ ہے
رسم الٹی ہے خوب رویوں کی
ھائے کیا دل نشین لہجہ تھا
کچے دھاگے کی طرح ٹوٹ گئی لمحوں میں
اتنا نہ سر اٹھا کہیں خطرے میں نہ پڑ جائے
جگر میں ٹیس لب ہنسنے پہ مجبور