اردوئے معلیٰ

Search

جو شمع یادِ نبی کی جلائی جاتی ہے

تو روشنی کی کرن دل پہ چھائی جاتی ہے

 

خیالِ مدنی میاں جب بھی مجھ کو آتا ہے

شبیہہ ان کی تصور میں چھائی جاتی ہے

 

مہک وہ جنتِ فردوس کے چمن میں کہاں

مہک جو گیسوئے احمد سے آئی جاتی ہے

 

چلو اے حاجیو مکے سے ہم مدینے چلیں

درِ رسول پہ بگڑی بنائی جاتی ہے

 

مدینے اپنے فداؔ کو بھی اب بلا لجیے

کہ جھکنے آپ کے در پر خدائی جاتی ہے

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ