اردوئے معلیٰ

Search

دیویوں کو مندروں میں جاپ کی خاطر ملے

لوگ سمجھے داس اُن سے پاپ کی خاطر ملے

 

عاجزی سیکھی کہ تربیت کو سب اچھا کہیں

ہم تو جھک کے سب سے ہی ماں باپ کی خاطر ملے

 

زندگی ہم سے ملی یوں جیسے داروغہ کوئی

مجرموں سے گردنوں کے ناپ کی خاطر ملے

 

ہم نے گھر آئے ہوئے مہمان کا رکھا خیال

تیرے بھیجے درد کی چپ چاپ کِی ، خاطر ، ملے

 

اب اسے بے راہ روی بولیں کہ کومل بے بسی

آپ کے ہم شکل سے ہم آپ کی خاطر ملے

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ