اردوئے معلیٰ

ذکرِ احمد اپنی عادت کیجئے

ذکرِ احمد اپنی عادت کیجئے

اس طرح اظہارِ الفت کیجئے

 

چاہتے ہیں گر خُدا کی رحمتیں

پیارے آقا سے محبت کیجئے

 

اُن کی یادیں دل میں رکھئے ہر گھڑی

اور یوں سامانِ راحت کیجئے

 

دو جہاں میں سرخرو ہو جائیے

ہر عمل پابندِ سنت کیجئے

 

بول اٹھیں گے قبر میں منکر نکیر

آگئے آقا زیارت کیجئے

 

حشر میں ہو گی یہ بخشش کا سبب

رات دن آقا کی مدحت کیجئے

 

رحمۃُ اللعٰلمینی کے طفیل

یا نبی! ہم پر بھی رحمت کیجئے

 

آپ ہیں مخلوق کے حاجت روا

پوری آصف کی بھی حاجت کیجئے

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے

اشتہارات

لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ