اردوئے معلیٰ

رائیگانی کا کسیلا ذائقہ ہونٹوں پہ ہے

رائیگانی کا کسیلا ذائقہ ہونٹوں پہ ہے

عمر اب بے کیف لمحوں کا تسلسل رہ گئی

کھا گئی دیمک جبینِ سجدہ ریزِ عجز کو

زندگی کی اپسراء محوِ تغافل رہ گئی

 

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے

اشتہارات

لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ