سکوں جاتا ہے ، دل جاتا ہے ، صبر و ہوش جاتے ہیں

سکوں جاتا ہے ، دل جاتا ہے ، صبر و ہوش جاتے ہیں

مگر الفت تری اے دشمنِ جانی نہیں جاتی

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے

اشتہارات

لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ