شعور ِ ہست میں ڈھل کر ، شعار ِ آگہی بن کر

شعور ہست میں ڈھل کر،شعار آگہی بن کر

خدا کا نور اُترا ہے زمیں پر روشنی بن کر

 

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
Share on facebook
Share on twitter
Share on whatsapp
Share on telegram
Share on email

اشتہارات

لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ

اردوئے معلیٰ

پر

خوش آمدید!

گوشے

متعلقہ اشاعتیں

روتی رہے گی آنکھ تھر کتے رہیں گے لب
جانِ گلزارِ مصطفائی تم ہو
محمدؐ با خدا پیشِ نظر ہیں
آپؐ ہیں خیر البشر خیر الوریٰ میرے نبیؐ
یہ عطائے خدا ہے نعمت ہے
محبت ہے مجھے رب العلیٰ سے
کسی کو مال و دولت سے نوازا
پُر خار زندگی کو پھر پُر بہار کر دو
’’عرش پہ تازہ چھیڑ چھاڑ فرش پہ طُرفہ دھوم دھام‘‘
’’ہے عام کرم اُن کا اپنے ہوں کہ ہوں اعدا‘‘

اشتہارات