اردوئے معلیٰ

 

عدو کے واسطے، ہر ایک امتی کے لیے

دعائیں کیں شہِ کونین نے سبھی کے لیے

 

میں پی رہا ہوں مسلسل شرابِ عشقِ رسول

یہ بے مثال ہے تسکین سرمدی کے لیے

 

مدام رشکِ گُل تر کا تذکرہ لب پر

سجائے رکھتا ہوں ایماں کی تازگی کے لیے

 

تم اپنے پاس رکھو ہر خوشی، جہاں والو

نبی کا غم ہے بہت میری زندگی کے لیے

 

ہوائے گلشن طیبہ کا ایک ہی جھونکا

بہت ہے غنچۂ دل کی شگفتگی کے لیے

 

کرم کی ایک جھلک اب تو اے مہِ طیبہ

ترس رہا ہے کوئی کب سے چاندنی کے لیے

 

سیاہ خانۂ دل میں جلا لیا شارب

چراغ ان کی محبت کا روشنی کے لیے

 

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے

اشتہارات

لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ

اردوئے معلیٰ

پر

خوش آمدید!

گوشے۔۔۔

حالیہ اشاعتیں

اشتہارات

اشتہارات