اردوئے معلیٰ

فکر کی آگ میں بنتا ہے سخن

فکر کی آگ میں بنتا ہے سخن

حرف پر سوزِ دعا ہو جیسے

ہر غزل میں یہی محسوس ہوا

میں نے کچھ ان سے کہا ہو جیسے

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے

اشتہارات

لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ