اردوئے معلیٰ

قدم ، قدم پہ صدف رشکِ کہکشاں دیکھو

زمینِ بطحا میں آباد آسماں دیکھو

 

ازل سے بزمِ درود و سلام جاری ہے

خدا کے قرب میں آقا کا آستاں دیکھو

 

جو دشمنوں کو بھی رحمت کی دے دُعا یارو!

کہیں ملے گا کوئی اُن سا مہرباں دیکھو

 

زمیں پہ خلد نشاں ، شہرِ امن ، رحمت ہے

مدینہ حُسنِ عطا ، حُسنِ جاوِداں دیکھو

 

نہ خوفِ گرمیء محشر ، نہ ڈر عذابوں کا

لگا ہے اُن کے کرم کا یہ شامیاں دیکھو

 

نبی کے سائے میں اُمت کا شان و شوکت سے

رضاؔ بہشت کو جاری ہے کارواں دیکھو

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے

اشتہارات

لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ

اردوئے معلیٰ

پر

خوش آمدید!

گوشے۔۔۔

حالیہ اشاعتیں

اشتہارات

اشتہارات