مریض جاں بلب ہو لادوا ہو

مریض جاں بلب ہو لادوا ہو

درِسرکارؐ پر آئے شفا ہو

وہی تقدیرِ اِنساں امرِ ربیّ

ظفرؔ جو بھی رضائے مصطفیٰؐ ہو

 

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
Share on facebook
Share on twitter
Share on whatsapp
Share on telegram
Share on email
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ

اردوئے معلیٰ

پر

خوش آمدید!

گوشے

متعلقہ اشاعتیں

بخشش تھی سو رحمت کے خزینے سے مِلی ھے
پَل میں ورائے عرش گئے اور آگئے
درِ سرکارؐ کیا عظمت نشاں ہے
وہ صداقت وہ دیانت آپؐ کی
خداوندا مرا دِل شاد رکھنا
مرا محبوب، محبوبِ زماں ہے
سگِ در ہوں درِ سرکارؐ کا مَیں
وہی جو رحمۃ العالمیں ہیں
’’اے رضاؔ ہر کام کا اک وقت ہے‘‘
’’ملکِ سُخن کی شاہی تم کو رضاؔ مُسلّم‘‘