مرے دل میں مری سرکار کی بس یاد بستی ہے

مرے دل میں مری سرکار کی بس یاد بستی ہے

قلوبِ عاشقاں پر آپ کی رحمت برستی ہے

زمانے فیض یاب اُن سے، کرم اُن کا جہانوں پر

خدا کی بھی ہے جو ممدوح، مرے آقا کی ہستی ہے

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے

اشتہارات

لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ