اردوئے معلیٰ

Search

باد چلتی ہے یوں قرینے سے

جیسے آئی ہو یہ مدینے سے

 

اے حبیبِ خدا عنایت ہو

کچھ تو رحمت مجھے خزینے سے

 

آپ محشر کے دن لگا لینا

میرے آقا مجھے بھی سینے سے

 

سب جہانوں کے سارے پھولوں کی

باس کم تر ہے اس پسینے سے

 

جس میں حبّ رسولِ پاک نہ ہو

مرنا بہتر ہے ایسے جینے سے

 

گرچہ انساں ہوں میں فرومایہ

مجھ کو نسبت ہے اس سفینے سے

 

ایسا نبیوں میں ہے مقام ان کا

جیسے زیور میں ہوں نگینے سے

 

آپ پہنچے تھے عرش پر آقا

سدرۃ المنتہیٰ کے زینے سے

 

قرب سلمان کو ہے ان کا عزیز

حوض کوثر کا پانی پینے سے

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ