اردوئے معلیٰ

’’بختِ خفتہ نے مجھے روضہ پہ جانے نہ دیا‘‘

 

’’بختِ خفتہ نے مجھے روضہ پہ جانے نہ دیا‘‘

حالِ دل شاہِ مدینہ کو سنا نے کو نہ دیا

جالیِ پاک کو آنکھوں میں بسا نے نہ دیا

’’چشم و دل سینے کلیجے سے لگا نے نہ دیا‘‘

 

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے

اشتہارات

لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ