اردوئے معلیٰ

Search

کُن کے کُل التفات کا مطلع

آپ ہیں کائنات کا مطلع

 

آپ کے اسم کا توارد ہے

خاورِ شش جہات کا مطلع

 

ہے خیالِ جمالِ شہرِ کرم

شوق کی بات بات کا مطلع

 

تابشِ نعت سے فروزاں ہے

مقطعِ ممکنات کا مطلع

 

زلف و رُخ سے ہیں مستنیر ہوئے

صبح کی تاب ، رات کا مطلع

 

خاتمِ انبیا ہی ہیں لا ریب

سب کے سب معجزات کا مطلع

 

آپ کے نقش ہائے جاں پرور

تا ابد ہیں حیات کا مطلع

 

’’ مَن رَآنی ‘‘ کا اوجِ بے تمثیل

ذاتِ والا صفات کا مطلع

 

آپ مقصودِؔ کُل ہُوئے ، ورنہ

زیست تھی مہملات کا مطلع

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ