ہندو سمجھ کے مجھ کو جہنم نے دی صدا

 

ہندو سمجھ کے مجھ کو جہنم نے دی صدا

میں پاس جب گیا تو نہ مجھ کو جلا سکا

 

بولا کہ تجھ پر کیوں میری آتش ہوئی حرام

کیا وجہ ،تجھ پر شعلہ جو قابو نہ پاسکا

 

کیا نام ہے ،تو کون ہے، مذہب ہے تیرا کیا

حیراں ہوں میں ، عذاب جو تجھ تک نہ جا سکا

 

میں نے کہا جائے تعجب ذرا نہیں

واقف نہیں تو میرے دل حق شناس کا

 

ہندو سہی مگر ہوں ثنا خوان مصطفےٰ

اس واسطے نہ شعلہ ترا مجھ تک آسکا

 

ہے نام دلو رام ، تخلص ہے کوثری

اب کیا کہوں ، بتا دیا جو کچھ بتا سکا

 

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے

اشتہارات

لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ