اردوئے معلیٰ

Search

دن کڑی دھوپ میں کٹ جائے گا تنہاؔ یوں بھی

وعدۂ یار کی یہ رات بِتا لی جائے

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ