ز دامنے کہ کشائیم ما تہی دستاں

ز دامنے کہ کشائیم ما تہی دستاں

تو میوۂ سرِ شاخِ بلند را چہ خبر

 

اُمیدوں اور آرزؤں کا وہ دامن کہ جو ہم

تہی دست پھیلائے ہوئے کھڑے ہیں

تُو کہ بلند و بالا، اونچی شاخ کا میوہ ہے

تجھے اس پھیلے ہوئے دامن کی کیا خبر

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے

اشتہارات

لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ