اردوئے معلیٰ

Search

عشقِ تو کہ سرمایۂ ایں درویش است

ز اندازۂ ہر ہوس پرستے بیش است

شورے است کہ از ازل مرا در سر بُود

کارے است کہ تا ابد مرا در پیش است

 

تیرا عشق کہ یہ اِس درویش کا (کُل) سرمایہ ہے

اور یہ سرمایہ اتنا ہے کہ ہر ہوس پرست کے اندازوں

سے زیادہ ہے۔ تیرے عشق کا جنون، ایسا جنون ہے

کہ جو ازل ہی سے میرے سر میں تھا،اور تیرا عشق

ایک ایسا کام ہے کہ جو ابد تک میرے

سامنے ہے اور مجھے یہ کام کرنا ہے

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ