اردوئے معلیٰ

Search

لب پہ میرے جو یوں سج گئی نعت ہے

آپ کی یاد کی ہر گھڑی نعت ہے

 

دشتِ ظلمت میں پائی ہے سب نے ضیا

آمدِ مصطفےٰ کی خوشی نعت ہے

 

مشکلیں دور ہوں گی مری آپ سے

زندگی میں مری روشنی نعت ہے

 

جب کیا تذکرہ دل مرا کھل اٹھا

اس عقیدے کی یہ تازگی نعت ہے

 

حشر میں لاج رکھ لیں گے وہ بالیقیں

میرے ایمان کی پختگی نعت ہے

 

اب سخن میں غزل سے نہیں واسطہ

میری فطرت کی ہر اک لڑی نعت ہے

 

زاہدؔ بے ریا کی ہو مدحت قبول

میرے اظہار کی شاعری نعت ہے

 

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ