ہر ایک گل شگفتہ غماز ترا

ہر ایک گل شگفتہ غماز ترا

غنچے کی چٹک میں نغمہ ساز ترا

واللیل اذا سجی ادا ہے تیری

والصبح اذا تنفس انداز ترا

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے

اشتہارات

لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ