اردوئے معلیٰ

Search

خالق دو جہاں جن کا ہے مدح خواں

ان کے اوصاف ممکن نہیں ہوں بیاں

 

عرش سے فرش تک فرش سے عرش تک

ساری مخلق میں آپ سا ہے کہاں

 

فکرِ امت رہی عمر بھر آپ کو

آپ امت پہ ہیں کس قدر مہرباں

 

تاجدارِ حرم کا ہے فیضان سب

ظلمتیں مٹ گئیں ہے منور جہاں

 

شافعِ حشر ہیں آپ ہی وارثیؔ

عاصی امت کا ہیں آپ ہی سائباں

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ