مرا عشق و عرفاں، مرا دین و ایماں، محبت نبیؐ کی عبادت خدا کی

مرا عشق و عرفاں، مرا دین و ایماں، محبت نبیؐ کی عبادت خدا کی

مرے دل کا ارماں، مرے دُکھ کا درماں، محبت نبیؐ کی عبادت خدا کی

 

یہ ارشاد ہے انبیا اولیا کا، یہی قول مردانِ صدق و صفا کا

حدیثِ نبیؐ ہے یہی درسِ قراں، محبت نبیؐ کی عبادت خدا کی

 

خدا سے بعجز و ادب مانگتے ہیں، اُٹھائے ہیں دستِ طلب مانگتے ہیں

سدا مانگتے ہیں سبھی جن و انساں، محبت نبیؐ کی عبادت خدا کی

 

مدینہ و مکّہ کی جانب سفر ہے، خدائی کا محبوب پیشِ نظر ہے

رہِ عشق و مستی میں شمعِ فروزاں، محبت نبیؐ کی عبادت خدا کی

 

فضاؤں میں چہکار حمد و ثنا کی، ہواؤں میں مہکار حمد و ثنا کی

خدا نے عطا کی مجھے بھی فراواں، محبت نبیؐ کی عبادت خدا کی

 

نبیؐ سے مجھے عشق وارفتگی ہے، خدا سے مجھے پیار وابستگی ہے

کرے ہے مرے دل میں ہر دم چراغاں، محبت نبیؐ کی عبادت خدا کی

 

ظفرؔ تیری حمد و ثنا سن رہے ہیں، نبی پاکؐ ربّ العلیٰ سن رہے ہیں

بنا لے گی تجھ کو شہنشہ کا درباں، محبت نبیؐ کی عبادت خدا کی

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
Share on facebook
Share on twitter
Share on whatsapp
Share on telegram
Share on email
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ

اردوئے معلیٰ

پر

خوش آمدید!

گوشے

متعلقہ اشاعتیں

یارب ہے بخش دینا بندے کو کام تیرا
جو جسم و جاں کے ساتھ ہے شہ رگ کے پاس ہے
تری ذات سب سے عظیم ہے تری شان جل جلالہٗ
اگر جہان میں آتے نہ مصطفیٰؐ اللہ
حوالہ ہے تُو عفو و درگزر کا، کہ تو ستّار بھی غفّار بھی ہے
خدا ہم ورد و مُونس ہے، شفیق و مہرباں ہے
خدا کی مہرباں ہے ذات لکھوں
خدا مونس، شفیق و مہرباں ہے
کرو مخلوق کی خدمت، یہی خالق کا فرماں ہے
محبت کی صدا ہے اِسمِ اعظم