اردوئے معلیٰ

مرا عشق و عرفاں، مرا دین و ایماں، محبت نبی کی عبادت خدا کی

مرا عشق و عرفاں، مرا دین و ایماں، محبت نبی کی عبادت خدا کی

مرے دل کا ارماں، مرے دُکھ کا درماں، محبت نبی کی عبادت خدا کی

 

یہ ارشاد ہے انبیا اولیا کا، یہی قول مردانِ صدق و صفا کا

حدیثِ نبی ہے یہی درسِ قراں، محبت نبی کی عبادت خدا کی

 

خدا سے بعجز و ادب مانگتے ہیں، اُٹھائے ہیں دستِ طلب مانگتے ہیں

سدا مانگتے ہیں سبھی جن و انساں، محبت نبی کی عبادت خدا کی

 

مدینہ و مکّہ کی جانب سفر ہے، خدائی کا محبوب پیشِ نظر ہے

رہِ عشق و مستی میں شمعِ فروزاں، محبت نبی کی عبادت خدا کی

 

فضاؤں میں چہکار حمد و ثنا کی، ہواؤں میں مہکار حمد و ثنا کی

خدا نے عطا کی مجھے بھی فراواں، محبت نبی کی عبادت خدا کی

 

نبی سے مجھے عشق وارفتگی ہے، خدا سے مجھے پیار وابستگی ہے

کرے ہے مرے دل میں ہر دم چراغاں، محبت نبی کی عبادت خدا کی

 

ظفرؔ تیری حمد و ثنا سن رہے ہیں، نبی پاک ربّ العلیٰ سن رہے ہیں

بنا لے گی تجھ کو شہنشہ کا درباں، محبت نبی کی عبادت خدا کی

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے

اشتہارات

لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ